دینہ کے بس اور ویگن سٹاپ پر منرل واٹر کے نام پر لوگوں کو گندہ پانی فروخت کیا جانے لگا

دینہ میں بس اور ویگن سٹاپ پر فروخت ہونے والا پانی منرل واٹر کے نام پر لوگوں کو گندہ پانی پلانے لگے، جعلی بوتلوں میں گندہ پانی بھر کر ویگنوں اور بسوں میں سوار مسافروں کو تھما کر غائب ہو جاتے ہیں، پیسے منرل واٹر کے وصول کیے جاتے ہیں اور لوگوں کی زندگیوں کے ساتھ کھیل رہے ہیں، منرل واٹر کی خالی بوتلیں نشئیوں سے خریدنے کا انکشاف۔

تفصیلات کے مطابق دینہ میں عرصہ دراز سے بس اور ویگن سٹاپ پر مسافروں کے لیے بکنے والا منرل واٹر پانی کے نام پر لوگوں کو گندہ پانی بوتلوں میں بھر کر فروخت ہونے لگا، لاہور سے راولپنڈی اور راولپنڈی سے لاہور کی طرف جانے والی بسیں، ہائی ایس اور دینہ سے جہلم جانے والی ویگنوں میں سر عام جعلی منرل واٹر کی بوتلوں میں گندہ پانی بھر کے لوگوں کو فروخت کرنے لگے۔

لوگ منرل واٹر سمجھ کر پانی خریدتے ہیں جبکہ دینہ میں بس سٹاپ پر موجود لڑکے بڑی چالاکی کے ساتھ جعلی بوتلوں میں گندہ پانی بھر کر لوگوں کو تھما دیتے ہیں، اس سلسلے میں یہ بھی انکشاف ہوا ہے کہ بس سٹاپ پر بوتلیں بیچنے والے نشئیوں سے منرل واٹر کی خالی بوتلیں ان سے خریدتے ہیں اور اس میں اپنا پانی بھر کر فروخت کرتے ہیں۔

شہریوں نے ڈپٹی کمشنر جہلم اور دیگر انتظامیہ سے اپیل کی ہے کہ جعلی بوتلوں میں گندہ پانی بھر کر لوگوں کی زندگیوں کے ساتھ کھیلنے والوں کے خلاف سخت سے سخت کارروائی عمل میں لائی جائے تاکہ لوگوں کی زندگیاں محفوظ رہ سکیں۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button